Advertisement

I have collected most famous poetry to please and admire you with nice collection of words. This collection of most famous poetry can express and show your best feelings and emotions about your crush. This collection of famous poetry can describe well that what you feel and think about someone in a very better way through nice collection of words.

Collection of Famous Poetry for You

A good choice of most famous poetry is given below for you to read and share with your best friends

most famous poetry to admire you

 

  • Silsilay Tor Gaya Woh Sabhi Jatay Jatay
     
    Silsilay Tor Gaya Woh Sabhi Jatay Jatay
    Warna Itne To Marasim The Ke Aate Jate
     
    Shikwa e Zulmat e Shab Sey Tou Behter Tha
    Apney Hissay Ki Koi Shamma Jalatay Jatay
     
    Kitna Asaan Tha Teray Hijr Mein Marna Janaa
    Phir Bhee Ik Umr Lagi Jaan Se Jatay Jatay
     
    Jashn e Maqtal Hi Na Barpa Hua Warna Hum
    Pa’ Bajoulaan Hi Sahi, Nachte Gaate Jatay
     
    Us Ki Woh Jane Usey Pass e Wafa Tha Keh Na Tha
    Tum Apni Taraf Se To Faraz Nibhate Jate
     
    By Ahmed Faraz
  • DOSTI K RISHTEY

    Rishte or Raaste Zindagi Ke 2 Pehloo Hain..
    Kabhi Kabhi Rishte Nibhate Nibhate Raaste Kho Jate Hain..
    Or Kabhi Raason Mein Chalte Chalte Rishte Ban Jate Hain..
    Kisi Ko Rishte Raas Ajate Hain Or Kisi Ko Raaste..
    Farq Bas Itna Hai..
    Raaston Ke Dukh Bardasht Ho Jate Hain Rishton Ke Nahin..
    Apne Rishton Ka Bohot Khayal Rakhen..
    Chahe Wo Rishte Khoon Ke Hon, Ehsaas Ke Hon, Pyar Ke Hon
    Ya Phir Dosti Ke

    great famous poetry for you

 

  • Dasht Main Pyas Bujhatay Huwe Mar Jatay HainDasht Mein Pyas Bujhate Hue Mar Jate Hain
    Hum Parindey Kaheen Jate Hue Mar Jate HainHum Hain Sookhe Hue Talab Pe Bethe Hans
    Jo Taluq Nibhate Hue Mar Jate HainGhar Puhanchta Hai Koi Aur Humhare Jesa
    Hum Tere Shehar Se Jate Hue Mar Jate Hain

    Kis Tarah Log Chale Jate Hain Uthh Kar Chup Chap
    Hum To Ye Dhiyan Mein Late Hue Mar Jate Hain

    Un Ke Bhi Qatal Ka Ilzam Hamare Sar Hai
    Jo Humain Zeher Pilatay Huwe Mar Jatay Hain

    Ye Mohabbat Ki Kahani Nahin Marti Lekin
    Log Kirdar Nibhate Hue Mar Jate Hain

    Hum Hain Wo Tooti Hui Kashtiyon Wale Tabish
    Jo Kinaron Ko Milate Hue Mar Jate Hain

    In Urdu :

    ﺩﺷﺖ ﻣﯿﮟ ﭘﯿﺎﺱ ﺑُﺠﮭﺎﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ
    ﮨﻢ ﭘﺮﻧﺪﮮ ﮐﮩﯿﮟ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ
    ﮨﻢ ﮨﯿﮟ ﺳﻮﮐﮭﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﺗﺎﻻﺏ ﭘﮧ ﺑﯿﭩﮭﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﮨﻨﺲ
    ﺟﻮ ﺗﻌﻠﻖ ﮐﻮ ﻧﺒﮭﺎﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ
    ﮔﮭﺮ ﭘﮩﻨﭽﺘﺎ ﮨﮯ ﮐﻮﺋﯽ ﺍﻭﺭ ﮨﻤﺎﺭﮮ ﺟﯿﺴﺎ
    ﮨﻢ ﺗﺮﮮ ﺷﮩﺮ ﺳﮯ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ
    ﮐﺲ ﻃﺮﺡ ﻟﻮﮒ ﭼﻠﮯ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ ﺍُﭨﮫ ﮐﺮ ﭼُﭗ ﭼﺎﭖ
    ﮨﻢ ﺗﻮ ﯾﮧ ﺩﮬﯿﺎﻥ ﻣﯿﮟ ﻻﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ
    ﺍُﻥ ﮐﮯ ﺑﮭﯽ ﻗﺘﻞ ﮐﺎ ﺍﻟﺰﺍﻡ ﮨﻤﺎﺭﮮ ﺳﺮ ﮨﮯ
    ﺟﻮ ﮨﻤﯿﮟ ﺯﮨﺮ ﭘﻼﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ
    ﯾﮧ ﻣﺤﺒّﺖ ﮐﯽ ﮐﮩﺎﻧﯽ ﻧﮩﯿﮟ ﻣﺮﺗﯽ ﻟﯿﮑﻦ
    ﻟﻮﮒ ﮐﺮﺩﺍﺭ ﻧﺒﮭﺎﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ
    ﮨﻢ ﮨﯿﮟ ﻭﮦ ﭨﻮﭨﯽ ﮨﻮﺋﯽ ﮐﺸﺘﯿﻮﮞ ﻭﺍﻟﮯ ﺗﺎﺑﺶ
    ﺟﻮ ﮐﻨﺎﺭﻭﮞ ﮐﻮ ﻣﻼﺗﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﻣﺮ ﺟﺎﺗﮯ ﮨﯿﮟ

 

  • Tulu-E-Shams-E-Mufaraqt Hai Ghazal by Amjad Islam Amjad
    طلوع شمس مفارقت ہے
    پرانی کرنیں نئے مکانوں کے آنگنوں میں لرز رہی ہیں
    فصیل شہر وفا کے روزن چمکتے زروں سے بھر گئے ہیں
    گئےدنوں کی عزیز باتیں نگار صبحیں گلاب راتیں
    بساط دل بھی عجیب شے ہے ہزار جیتیں ہزار ماتیں
    جدائیوں کی ہوائیں لمحوں کی خوش مٹی اڑا رہی ہیں
    گئ رتوں کاملال کب تک
    چلو کہ شاخیں تو ٹوٹتی ہیں
    چلو کہ قبروں پہ خون رونے سے
    اپنی آنکھیں ہی پھوٹتی ہیں
    یہ موڑ وہ ہے جہاں سے میرے تمہارے راستے بدل گۓ ہیں
    پرانی راہوں کو لوٹنا بھی ہماری تقدیر میں نہیں
    کہ راستے بھی ہمارے قدموں کے ساتھ آگے نکل گۓ ہیں
     
    طلوع شمس مفارقت ہے
    تم اپنیآنکھوں میں جھلملاتے ستاروں کو موت دے دو
    گئی رتوں کے تمام پھولوں تمام خاروں کو موت دےدو
    نۓ سفر کو حیات بخشو
    کہ پچھلی راہوں پہ ثبت جتنے نقوش پا ہیں
    وہ بار ہونگے
    ہوا ازاۓ کہ تم اڑاؤ

    nice collection of famous poetry for lovers

 

  • میں گیا تھا اس گلی میں
    میں گیا تھا اس گلی میں۔۔۔۔۔۔
    میں گیا تھا،اس گلی میں کئ خواہشیں پہن کر
    وہ جو تھیں بہت شناسا
    انہی کھڑکیوں سے اب کے
    کسی رخ کی روشنی سے نہ چراع کوئ لرزا
    نہ کوئ ستارا چمکا، نہ ہی پھول کوئ آیا
    دل منتظر کی جانب
    نہ اٹھائ کوئ چلمن کسی دست پر حنا نے
    نہ صبا کی دستکوں سے کوئ پروا سرسرایا
    کسی خواب سے الجھ کر نہ تو چوڑیاں ہی چھنکیں
    کسی آنکھ میں سمٹ کر نہ ہی چاند مسکرایا
    میں گیا تھا،اس گلی میں کئ خواہشیں پہن کر
  • کس کو معلوم تھا
    یوں ہی چلتے ہوۓ راستوں میں کوئ ہم سفر جو ملے
    اور بچھڑتے گیۓ
    آتے جاتے ہوۓ موسموں کی طرح
    آپ ہی اپنی گرد سفر ہو گیۓ
    نہ کبھی میں پھر مڑ کے دیکھا انہیں اور نہ سوچا کبھی
    وہ کہاں کھو گیۓ
    جو گیۓ، سو گیۓ
    پھر یہ کیسے ہوا
    یوں ہی ایک اجنبی دیکھتے دیکھتے
    دل میں اترا، نظر میں سما گیا
    اور دھنک رنگ جزبے سجا سا گیا
    جیسے بادل کوئ، بے ارادہ یونہی، میری چھت پہ رکا
    اور برسے بنا اس پہ ٹہرا رہا
    کیا تماشہ ہوا، سامنے تھی ندی اور کوئ تشنہ لب
    اس کو تکتا رہا اور پیاسا رہا
    اک لمحے میں سمٹے گی یہ داستاں
    کس کو معلوم تھا
    تم ملو گے مجھے اس طرح بے گماں
    کس کو معلوم تھا
  • اگرچہ تجھ سے بہت اختلاف بھی نہ ہوا
    اگرچہ تجھ سے بہت اختلاف بھی نہ ہوا
    مگر یہ دل تری جانب سے صاف بھی نہ ہوا
    تعلقات کے برزخ میں ہی رکھا مجھ کو
    وہ میرے حق میں نہ تھا اور خلاف بھی نہ ہوا
    عجب تھا جرم محبت کہ جس پہ دل نے میرے
    سزا بھی پائ نہیں اور معاف بھی نہ ہوا
    ملامتوں میں کہاں سانس لے سکیں گے وہ لوگ
    کہ جن سے کوۓ جفا کا طواف بھی نہ ہوا
    عجب نہیں ہے کہ دل پر جمی ملی کائ
    بہت دنوں سے تو یہ حوض صاف بھی نہ ہوا
    ہواۓ دہر ہمیں کس لیۓ بجھاتی ہے
    ہمیں تو تجھ سے کبھی اختلاف بھی نہ ہوا
Advertisement
https://i1.wp.com/siyyahposh.com/wp-content/uploads/2016/10/famous-poetry.jpeg?fit=800%2C569https://i1.wp.com/siyyahposh.com/wp-content/uploads/2016/10/famous-poetry.jpeg?resize=150%2C150SiyyahPosh4 Line PoetryGhazal ShayariGhazalsHeart Touching PoetryLove PoetryPoetryRomantic PoetrySad PoetryI have collected most famous poetry to please and admire you with nice collection of words. This collection of most famous poetry can express and show your best feelings and emotions about your crush. This collection of famous poetry can describe well that what you feel and think about...Your best source of Sad Urdu poetry

Comments

comments